مسیحیت

مَسِیحِیَّت ایک تثلیث کا عقیدہ رکھنے والا مذہب ہے، جو یسوع کو مسیح، خدا کا بیٹا اور خدا کا ایک اقنوم مانتا ہے۔ اور اسے بھی عین اسی طرح خدا مانتا ہے، جیسے خدا اور روح القدس کو۔ جنہیں بالترتیب باپ، بیٹا اور روح القدس کا نام دیا جاتا ہے۔ اپنے پیروکاروں کی تعداد کی اعتبار سے مسیحیت دنیا کا سب سے بڑا مذہب ہے۔ 1972ء میں رومی کاتھولک، مشرقی راسخ الاعتقاد اور پروٹسٹنٹ گروہوں کی تعداد 98,53,63,400 تھی۔ اس کا مطلب ہے کہ زمین میں بسنے والے تقریباً ہر تین افراد میں سے کسی نہ کسی کا تعلق مسیحیت سے ہے۔ ظاہری بات ہے کہ اتنے زیادہ لوگوں پر مشتمل مذہب میں عقائد و وظائف کی وسیع تعداد ہوگی۔ عمومی لحاظ سے مسیحیوں میں یسوع ناصری کی انفرادیت کے بارے میں عقیدہ مشترک ہے کہ وہ خدا کے بیٹے تھے اور انہوں نے اپنی صلیبی موت کے ذریعہ انسانیت کا کفارہ ادا کیا اور اپنی موت کے تیسرے دن ہی قبر سے جی اٹھے۔ مسیحی لوگ مذہب میں داخلے کے لیے بپتسمہ پر عقیدہ رکھتے ہیں۔ ان کا نظریہ ہے کہ ایمان لانے والے کے پاس ایک زندگی ہے جس میں اُسے حیات بعد الموت کے لیے اپنی تقدیر کے متعلق فیصلہ کرنا ہوتا ہے۔ اس تقدیر میں عموماً جنت کی ابدی رحمت یا جہنم کا دائمی عذاب شامل ہے۔

مسیحیت
صلیب: مسیحی مذہبی علامت

بانی یسوع مسیح
مقام ابتدا یروشلم،
 رومی سلطنت
تاریخ ابتدا پہلی صدی
ابتدا یہودیت سے (مسیحیوں کے عقائد کے مطابق یسوع مسیح الگ مذہب نہیں بنانے آئے تھے بلکہ وہ یہودیت کی اصلاح کے لیے آئے تھے۔)
فرقے کاتھولک، مشرقی، اورینٹل، پروٹسٹنٹ
مقدس مقامات
قریبی عقائد والے مذاہب یہودیت، اسلام، مندائیت، بہائیت
مذہبی خاندان ابراہیمی مذہب
پیروکاروں کی تعداد 2.4 بلین (2015ء)
دنیا میں شمالی امریکا، جنوبی امریکا، یورپ، اوقیانوسیہ، وسطی و جنوبی افریقا میں اکثریت اور صرف ایشیا میں مسیحی اقلیت ہیں۔

مسیحیت میں کئی فرقے ہیں، جن میں دو بڑے فرقے ہیں کاتھولک اور پروٹسٹنٹ۔

This article is issued from Wikipedia. The text is licensed under Creative Commons - Attribution - Sharealike. Additional terms may apply for the media files.