ناورو

ناورو (Nauru) جنوبی بحر الکاہل کی سب سے چھوٹی اور ویٹیکن سٹی، موناکو کے بعد دنیا کی تیسری سب سے چھوٹی آزاد جمہوریہ ہے۔ یہ جنوبی بحرالکاہل میں واقع ہے۔ یہ ایک جزیرے پر مشتمل ہے اور اس کا رقبہ 21 مربع کلومیٹر (8.1 مربع میل) ہے۔ اس کی آبادی 13005 ہے۔ یہ 31 جنوری 1968ء کو آسٹریلیا، برطانیہ اور نیوزی لینڈ سے آزاد ہوئی۔

  

ناورو
(ناورونیہ میں: Ripublik Naoero) 
ناورو
پرچم
ناورو
نشان

 

شعار
(انگریزی میں: God's will first) 
ترانہ:
زمین و آبادی
متناسقات 0.53333333333333°S 166.93333333333°E / -0.53333333333333; 166.93333333333   [1]
پست مقام بحر الکاہل (0 میٹر ) 
رقبہ 21.0 مربع کلومیٹر  
دارالحکومت یارن  
سرکاری زبان ناوروی زبان ،  انگریزی [2] 
آبادی 13650 (2017)[3] 
حکمران
قیام اور اقتدار
تاریخ
یوم تاسیس 1968 
عمر کی حدبندیاں
شادی کی کم از کم عمر 18 سال ،  16 سال  
الحاق اور رکنیت
خام ملکی پیداوار
  کل
113884908.36413 امریکی ڈالر (2017)[9] 
  فی کس 3752.753 بین الاقوامی ڈالر (2007)[10] 
جی ڈی پی تخمینہ
  فی کس 2042 امریکی ڈالر (2007)[11]
3954 امریکی ڈالر (2008)[11]
4453 امریکی ڈالر (2009)[11]
4912 امریکی ڈالر (2010)[11]
7233 امریکی ڈالر (2011)[11]
10099 امریکی ڈالر (2012)[11]
10036 امریکی ڈالر (2013)[11]
9872 امریکی ڈالر (2014)[11]
8052 امریکی ڈالر (2015)[11]
7821 امریکی ڈالر (2016)[11]
8844 امریکی ڈالر (2017)[11] 
دیگر اعداد و شمار
کرنسی آسٹریلوی ڈالر  
منطقۂ وقت متناسق عالمی وقت+12:00  
ٹریفک سمت بائیں [12] 
ڈومین نیم nr.  
سرکاری ویب سائٹ باضابطہ ویب سائٹ 
آیزو 3166-1 الفا-2 NR 
بین الاقوامی فون کوڈ +674[13] 
جمہوریہ کی مصنوعی سیارے سے تصویر

بحرالکاہل کے جزائر کے رہنے والے لوگ اس کے اصل باشندے تھے۔ اسے سب سے پہلے 1798ء میں پہلے یورپی جان فیرن نے دریافت کیا۔ پھر یہ جرمنی کی نوآبادی بنی۔ پہلی جنگ عظیم کے بعد یہ آسٹریلیا نیوزیلینڈ اور برطانیہ کے پاس چلی گئی۔ دوسری جنگ عظیم کے دوران اس پر جاپان کا قبضہ ہوا۔ اس کا دالحکومت یارن ہے۔

معیشت کا دارومدار فاسفیٹ پر ہے۔

ناورو نقشے پر

فہرست متعلقہ مضامین ناورو

فہرست متعلقہ مضامین ناورو

  1.   "صفحہ ناورو في خريطة الشارع المفتوحة"۔ OpenStreetMap۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 اگست 2019۔
  2. The World Factbook — مصنف: سی آئی اے — ناشر: سی آئی اے
  3. https://data.worldbank.org/indicator/SP.POP.TOTL
  4. https://www.interpol.int/Member-countries/World — اخذ شدہ بتاریخ: 7 دسمبر 2017 — ناشر: انٹرپول
  5. https://www.opcw.org/about-opcw/member-states/ — اخذ شدہ بتاریخ: 7 دسمبر 2017 — ناشر: تنظیم برائے ممانعت کیمیائی ہتھیار
  6. http://www.unesco.org/eri/cp/ListeMS_Indicators.asp
  7. http://www.upu.int/en/the-upu/member-countries.html — اخذ شدہ بتاریخ: 4 مئی 2019
  8. https://www.itu.int/online/mm/scripts/gensel8 — اخذ شدہ بتاریخ: 4 مئی 2019
  9. https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.MKTP.CD?locations=NR — اخذ شدہ بتاریخ: 20 اکتوبر 2018 — ناشر: عالمی بنک
  10. https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.PCAP.PP.CD — اخذ شدہ بتاریخ: 11 جون 2019 — ناشر: عالمی بنک
  11. https://data.worldbank.org/indicator/NY.GDP.PCAP.CD — اخذ شدہ بتاریخ: 27 مئی 2019 — ناشر: عالمی بنک
  12. http://chartsbin.com/view/edr
  13. اجازت نامہ: تخلیقی العام انتساب مماثل-شراکت اجازہ کا متن
This article is issued from Wikipedia. The text is licensed under Creative Commons - Attribution - Sharealike. Additional terms may apply for the media files.